لاہور (ٹوڈے نیوز ) پاکستان کرکٹ بورڈ نے اعلان کیاہے کہ سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان کرکٹ

 

سیریز منسوخ کر دی گئی ہے ,نیوزی لینڈ نے سیکیورٹی خدشات کا اظہار کرتے ہوئے سیریز کو یکطرفہ طور پر منسوخ کیا ۔ پاکستان کرکٹ

 

بورڈ کی جانب سے جاری پریس ریلیز میں کہا گیاہے کہ نیوزی لینڈ کرکٹ کی جانب سے ہمیں اطلاع دی گئی کہ انہیں کچھ سیکیورٹی الرٹس

 

موصول ہوئے ہیں اور وہ یکطرفہ طور پر سیریز کو منسوخ کرنے جارہے ہیں ۔پی سی بی کا کہناتھا کہ پی سی بی اور حکومت پاکستان کی جانب سے دورہ کرنے والی تما م ٹیموں کیلئے فل پروف سیکیورٹی انتظامات کیئے گئے اور ہم نے نیوزی لینڈ کو بھی یہی یقین دہانی کروائی تھی ، وزیراعظم پاکستان نے نیوزی لینڈ کی وزیراعظم کی رابطہ کر کے بتایا کہ ہماری انٹیلی جنس ایجنسی دنیا کی بہترین ایجنسی ہے اور مہمان ٹیم کو کوئی تھریٹ نہیں ہے ۔پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے جاری کر دہ بیان میں کہا گیاہے کہ نیوزی لینڈ کی ٹیم کے ہمراہ سیکیورٹی آفیشلز حکومت پاکستان کی جانب سے کیئے جانے والے سیکیورٹی انتظامات سے مطمئن تھے ۔پاکستان کرکٹ بورڈ شیڈول میچز کروانے کیلئے تیار ہے ، تاہم پاکستان سمیت دنیا بھر کے کرکٹ شائقین کو اس اچانک منسوخی کے فیصلے پر مایوسی ہو گی ۔نجی ٹی وی چینل کی جانب سے کچھ دیر قبل یہ دعویٰ کیا گیا تھا کہ نیوزی لینڈ کے تین کھلاڑیوں کے کورونا ٹیسٹ مثبت آئے ہیں جس کے بعد میچ منسوخ کر دیا گیاہے لیکن پی سی بی کی جانب سے پریس ریلیز سامنے آنے کے بعد کورونا کے باعث سیریز منسوخ ہونے کی افواہیں دم توڑ گئیں ۔ وفاقی وزیر اطاعلات ونشریات فواد چوہدری نے کہا ہے کہ اب سے کچھ دیر قبل وزیر اعظم عمران خان نے نیوزی لینڈ کی وزیر اعظم سے رابطہ کیا اور یقین دلایا کہ پاکستان میں نیوزی لینڈ کی ٹیم کو فول پروف سیکیورٹی میسر ہے۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ایک پیغام میں فواد چوہدری نے کہا کہ اب سے کچھ دیر قبل وزیر اعظم عمران خان نے نیوزی لینڈ کی وزیر اعظم سے رابطہ کیا اور یقین دلایا کہ پاکستان میں نیوزی لینڈ کی ٹیم کو فول پروف سیکیورٹی میسر ہے اورپاکستان کرکٹ بورڈ(پی سی بی ) کے مطابق خود نیوزی لینڈ کی

 

سیکیورٹی نے پاکستان کے سیکیورٹی انتظامات پر اطمینان کا اظہار کیا ہے۔نیوزی لینڈ کی جانب سے پاکستان کا دورہ منسوخ کیئے جانے پر چیئرمین پی سی بی رمیز راجہ نے مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے معاملے کو انٹر نیشنل کرکٹ کونسل میں اٹھانے کا اعلان کر دیاہے ۔تفصیلات کے مطابق چیئرمین پی سی بی رمیز راجہ نے ٹویٹر پر پیغام جاری کرتے ہوئے کہا کہ آج کا دن بہت ہی عجیب تھا ، میں اپنے کھلاڑیوں اور شائقین کرکٹ کیلئے بہت افسوس ہے ،سیکیورٹی خدشات پر یکطرفہ فیصلہ کرتے ہوئے دورے کو منسوخ کرنا ہے نہایت ہی مایوس کن ہے اور خصوصی طور پر اس وقت جب اس کو شیئر نہ کیا جائے ، نیوزی لینڈ کس دنیا میں جی رہا ہے ، نیوزی لینڈ ہمیں آئی سی سی میں سنے گا ۔پاکستان تحریک انصاف کے رہنما اور سینیٹر فیصل جاوید نے نیوزی لینڈ کی جانب سے کرکٹ سیریز اچانک منسوخ کرنے پر کہا کہ دو سال سے پاکستان میں کرکٹ مکمل طور پر بحال ہے ، یہاں بہترین سکیورٹی صورتحال ہے جو بھارت کو اچھی نہیں لگ رہی ۔فیصل جاوید نے کہا کہ انٹرنیشنل ٹیموں نے پاکستان کا دورہ کیا ، حال ہی میں مظفر آباد میں کشمیر پریمیئر لیگ منعقد ہوئی تھی ، نیوزی لینڈ کی ٹیم کو غیر معمولی سکیورٹی فراہم کی گئی تھی مگر اس کے باوجود نیوز لینڈ کی طرف سے آخری لمحات میں سیریز ملتوی کرنا سمجھ سے باہر ہے ، کوئی دشمن ہی ہے جس نے اس پلیٹ فارم پر سازش کی ہے ، بھارت کو ہضم نہیں ہو رہا کہ پاکستان میں سب اچھا ہے ۔پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے کہاہے کہ پاکستان اور نیوز ی لینڈ کے درمیان کرکٹ سیریز کے ختم ہونے پر مایوسی ہوئی ہے۔نیوزی لینڈ نے پاکستان کے ساتھ سیریز پہلے ون ڈے میچ سے چند لمحے قبل سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر منسوخ کرنے کا اعلان کر دیاہے ۔تفصیلات کے مطابق نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ کی جانب سے ٹویٹر پر جاری پیغام میں کہا گیاہے کہ ” نیوزی لینڈ کی حکومت کی جانب سے سیکیورٹی الرٹ موصول ہونے

 

کے بعد بلیک کیپس کا دورہ پاکستان منسوخ کر دیا گیاہے جس کے بعد ٹیم کی روانگی کیلئے انتظامات کیئے جارہے ہیں ۔“ پاکستان اور نیوز ی لینڈ کے درمیان کرکٹ سیریز منسوخ ہونے پر شائقین کرکٹ مایوس ہوگئے، پہلا ون ڈے دیکھنے کے لئے راولپنڈی سٹیڈیم کے باہر موجود شائقین کو واپس بھیج دیا گیا۔پاکستان اور نیوز ی لینڈ کے درمیان سیکیورٹی خدشات کے باعث سیریز کو منسوخ کردیا گیا ہے ، شائقین کی بڑی تعداد جو کہ آج پہلا ون ڈے میچ دیکھنے کے لئے راولپنڈی سٹیڈیم میں موجو تھی ان میں کافی مایوسی دیکھنے میں آرہی ہے۔شائقین کا کہنا ہے کہ ہم آج کے میچ کے حوالے سے بہت پرجوش تھے، ٹکٹس بھی ایڈوانس میں خرید رکھے تھے مگر میچ شروع ہونے سے کچھ دیر پہلے سیریز منسوخی کی اطلا ع ملی جو کہ بہت مایوس کن ہے۔واضح رہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ نے اعلان کیاہے کہ سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان کرکٹ سیریز منسوخ کر دی گئی ہے۔ پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے جاری کر دہ بیان میں کہاگیاہے کہ نیوزی لینڈ کی جانب سے سیکیورٹی خدشات کا اظہار کیا گیا ہے ، سیریز کو نیوزی لینڈ کی جانب سے یکطرفہ طورپر منسوخ کیا

 

گیاہے ۔ چیف ایگزیکٹو آفیسر پاکستان کرکٹ بورڈ وسیم خان نے نیوزی لینڈ کی ٹیم کی واپسی سے متعلق بتایا کہ مہمان ٹیم کی کل واپسی ہو گی ۔وزارت داخلہ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سی ای او پی سی بی نے کہا کہ کل خصوصی چارٹرڈ فلائٹ کے ذریعے نیوزی لینڈ کی ٹیم کو واپس بھیج دیا جائے گا، یہ افسوسناک امر ہے ، جو ہوا بہت غلط ہوا ہے ۔واضح رہے کہ نیوزی لینڈ نے سیکیورٹی خدشات کی بنیاد پر یکطرفہ طور پر دورہ پاکستان منسوخ کر دیاہے نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ کے فیصلے سے پاکستان کی کرکٹ کو شدید دھچکا پہنچاہے جس پر ہر کوئی افسردہ دکھائی دے رہاہے ۔نجی ٹی وی اے آر وائے نیوز کے مطابق انگلینڈ کرکٹ ٹیم نے آئندہ ماہ 14 اکتوبر کو پاکستان کے ساتھ دو ٹی ٹوینٹی میچز کھیلنے کیلئے پاکستان آنا ہے اور اس حوالے سے انگلش کرکٹ بورڈ نے کہاہے کہ سیکیورٹی ایکسپرٹ سے تفصیلی رپورٹ لی جائے گی ، پاکستان کے دورے سے متعلق فیصلہ 24 سے 48 گھنٹے میں کیا جائے گا ۔ وزیر داخلہ شیخ رشید نے کہا ہے کہ نیوزی لینڈ کی حکومت کے بعد ان کو تھریٹ موصول ہوا تھا کہ ٹیم کے ہوٹل سے باہر نکلنے پر حملہ ہوسکتا ہے۔راولپنڈی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انکا کہنا تھا کہ ہمارے پاس کسی قسم کا تھریٹ نہیں تھا،ہماری ایجنسیوں کو کوئی تھریٹ موصول نہیں ہوا تھا۔نیوزی لینڈ کی ٹیم کو دورے کے دوران بہترین سیکیورٹی فراہم کی گئی تھی۔ہم امن کے سب سے بڑے داعی ہیں۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں